گیت نمبر ۴۵۷
یسُوع تیرا سانس چلے میری سانسوں میں
یسُوع تیرا نُور بسے میری راتوں میں
1

تُو عبادت میری تُو رفاقت میری
تُو کفارہ میرا تُو سہارا میرا
یسُوع تیرا سایہ رہے میری راہوں میں
2

تُو شفاؤں کا گھر تُو وفاؤں کا گھر
تُو ہے سُندر جلال تیرا ہر سُو کمال
یسُوع صبح و شام رہے میری باتوں میں
3

دِل میں پوجا رہے نہ کوئی دُوجا رہے
زندگی کی اُمنگ ناصری تیرے سنگ
یسُوع تیرا گیت رہیں میرے گیتوں میں

Scroll to Top