گیت نمبر ۳۹۸
اَے خُداوند خُدا تُو ہے سُنتا دُعا
تُو تسلی میری تُو صبر ہے میرا
1

تیری کھیتی ہوں میں اور ہیکل بھی ہوں
تیرا مسکن ہوں میں اور مقدس بھی ہوں
رُوح ابن خُدا رُوح کی تعریف میں
زندگی کا سفر ہو بسر یہ میرا
2

میں گھٹوں تُوں بڑھے مَیں گِروں تُو اُٹھے
میَں مروں تُو جیے میں چھُپوں تُو دِکھے
خُون یسُوع مجھے روز دھوتا رہے
مَیں خُداوند کا ہوں ہو فخر یہ میرا
2

مَل کی آواز میں تیرا سنگیت ہے
کلوری کے خُدا تُو میرا میت ہے
آنکھ روشن رہے تجھ کو تکتی رہے
تیری آغوش میں اب ہو سر یہ میرا

Scroll to Top