گیت نمبر۳۲۲
1

جگ کے سہارے در پے تُمہارے آن گِرے ناشاد
کوئی نہیں جو تُم بن سُن لے دُکھیوں کی رُوداد
کون سُنے فریاد ہماری کون سُنے فریاد
2

تُمہی سہارے ہو جیون کے تُمہی اَجیارے ہو تن من کے
جب جب دُکھ کے بادل چھائے تُم ہی آئے یاد
ہماری کون سُنے فریاد
3

ہم ہیں بھُولے بھٹکے راہی غم کی گھٹا ہے سر پہ چھائی
آن پھنسے ہیں طوفانوں میں آو کرو آزاد
ہماری کون سُنے فریاد

Scroll to Top